علامہ اسماعیل حقی رَحْمَۃُ اللہِ عَلَیْہِ فرماتے ہیں :اللہ تعالیٰ نے ہدی کو لوگوں کے قیام کا ذریعہ بنایا اور ہدی وہ جانور ہے جسے حرم کی طرف لےجایا جاتا اور وہاں اسے ذبح کر کے اس کا گوشت فقیروں میں تقسیم کر دیا جاتا ہے تو یہ بھیجنے والے کی طرف سے قربانی ہوئی اوراس سے فقیروں کی حاجت پوری ہوئی یوں یہ دینی اور دنیوی کام کی انجام دہی کا سبب بنی ۔ میں کہتا ہوں :اسی سے صاف واضح ہوا کہ قربانی کرنے کا ایک اہم مقصد فقیروں اور ضرورت مندوں کی حاجت پوری کرنا ہے اسی لیے قربانی کرنے والے کے لیے مستحب ہے کہ گوشت کا اکثر حصہ بلکہ سارا گوشت ہی فقیروں اور ضرورت مندوں میں تقسیم کر دے۔(روح البیان341/3)
ہم سے رابطہ کیجئے

مفید مشورے ہم تک پہنچانے کے لئے ای میل کیجیئے

support@ilmidunya.net :ای میل

اگر آپ کچھ پوچھنا چاہ رہے ہیں تو ہمیں واٹس ایپ پر وائس میسج کیجیے، کال اور ٹیکسٹ کا جواب دینے سے معذرت خواہ ہیں

واٹس ایپ نمبر: 1234567899

تمام حقوق علمی دنیا ویب سائٹ کے حق میں محفوظ ہیں